اب رنگ گورا کرنا نہایت ہی آسان، یہ گھریلو ٹوٹکے اپنائیں اور ہو جائیں منٹوں میں گورے گورے

رنگ گورا کرنا ہر کسی کا خواب ہے۔ اب تو نہ صرف لڑکیاں بلکہ لڑکے بھی اپنی رنگت کے بارے میں بہت کونشیئس نظر آتے ہیں اور چاہتے ہیں کہ اُن کا رنگ بغیر کسی محنت کے گورا ہو جائے اور اسی چکر میں بازار سے طرح طرح کی رنگ گورا کرنے والی کریمیں لگانا شروع کر دیتے ہیں جن کے بارے میں یہ دعوٰی کیا جاتا ہے کہ ان کے استعمال سے چند دن میں ہی رنگ گورا ہو جاتا ہے۔


آج کل مارکیٹ میں ایسی بہت سی کریمیں آ چکی ہیں جو جن کو لگانے سے واقعی ہی رنگ چند دنوں میں گورا تو ہو جاتا ہے مگر اس میں موجود کیمیکلز ہماری جلد کے لیے نہایت نقصان دہ ہیں۔ کچھ کریمیں کچھ عرصہ استعمال کرنے کے بعد چہرے پر نشان بنانا شروع کر دیتی ہیں اور کچھ کریمیں تھوڑا عرصہ کے استعمال کے بعد چہرے کی رنگت پہلے سے بھی زیادہ خراب کر دیتی ہیں۔ اکثر دیکھا گیا ہے کہ رنگ گورا کرنے والی کریمیں شروع شروع میں تو بہت نکھار لاتی ہیں مگر کچھ عرصہ بعد یہ اثر کرنا چھوڑ دیتی ہیں اور پھر جب یہ کریمیں لگانا چھوڑ دیں تو چہرے کی رنگت بہت بدنُما ہو جاتی ہے لیکن بہت سے لوگ ایسے بھی ہیں جو ان کریموں کو استعمال نہیں کرتے اور رنگ گورا قدرتی طور پر کرنا چاہتے ہیں اور اس کے لیے ایسے گھریلو ٹوٹکوں کی تلاش میں رہتے ہیں جو استعمال کرنے میں آسان بھی ہوں اور زیادہ پُر اثر بھی ہوں۔ اگر آپ بھی ایسے ہی گھریلو ٹوٹکوں کی تلاش میں ہیں تو آپ بالکل صحیح جگہ پر آئے ہیں کیونکہ آج کے اس آرٹیکل میں ہم آپ کو ایسی کارآمد ٹِپس بتانے والے ہیں جو آسان بھی ہیں اور ان کو استعمال کرنے سے آپ کا رنگ قدرتی طور پر گورا ہو جائے گا اور ان گھریلو ٹوٹکوں کے کوئی نقصانات بھی نہیں ہوتے۔ ان ٹوٹکوں سے رنگ گورا ہونے کے ساتھ ساتھ جلد بھی تروتازہ اور صحت مند ہو جاتی ہے۔

قدرت نے ہمیں اس قدر نعمتوں سے نوازا ہے کہ ہم شمار ہی نہیں کر سکتے۔ ہمارے لیے جو پھل اور سبزیاں عطا کی ہیں اگر ہم انہی کو کھانے کے ساتھ ساتھ چہرے پر بھی استعمال کریں تو یہی ہمارے لیے کافی ہیں۔ آج کے اس بلاگ میں ایسے ہی کچھ ٹوٹکوں کا ذکر ہے جنہیں استعمال کر کے آپ اپنا چہرہ چاند سا بنا سکتے ہیں۔ تو آئیے ان ٹوٹکوں کی طرف چلتے ہیں۔

نائٹ لوشن

ایک بوتل میں لیموں کا رس، عرقِ گلاب اور گلیسرین ایک جتنی مقدار میں لیں اور مکس کر کے رکھ لیں۔ روز رات کو سونے سے پہلے چہرے پر لگا کر سو جائیں اور صبح اُٹھ کر مُنہ دھو لیں۔ یہ آزمودہ ٹوٹکہ ہے اس کے استعمال سے 2 سے 3 دن کے درمیان ہی آپ کو رزلٹ ملنا شروع ہو جائیں گے۔

اس کے علاوہ اگر ہاتھوں اور پاؤں پر بھی یہ لوشن لگانا ہو تو اس میں بورک ایسڈ کا بھی اضافہ کر لیں اور اچھی طرح مکس کر کے رکھ لیں اور یہ بورک ایسڈ والا لوشن ہاتھوں اور پاؤں پر رات کو سونے سے پہلے لگائیں۔

اس بات کا دھیان رکھیں کہ یہ لوشن لگا کر دھوپ میں یا چولہے کے آگے نہ جائیں۔

آلو گوری رنگت کا بہترین ساتھی

آلو کو اچھی طرح دھو کر اس کے گول سلائسز کاٹ لیں۔ پھر ان سلائسز کو باری باری چہرے پر دائرے کی شکل میں ہلکے ہاتھوں سے اس طرح ملیں کہ آلو کا رس جلد پر لگتا جائے ، یا دوسرا طریقہ یہ بھی ہے کہ آلو کو کَش کر لیں اور پھر اسے نچوڑ کر اس کا رس نکال لیں، اب اس رس کو چہرے پر لگائیں اور پندرہ سے بیس منٹ بعد سادہ پانی سے چہرے کو دھو لیں۔

آلو کے سلائسز کالی گردن کو گورا کرنے کے لیے بھی بیسٹ ہیں۔ آلو میں رنگ کو صاف کرنے اور داغ دھبوں کو ختم کرنے کے قدرتی اجزاء پائے جاتے ہیں۔

دہی اور شہد کا ماسک

دہی میں رنگت گوری کرنے کے قدرتی اجزاء پائے جاتے ہیں اور شہد جلد کو نرم رکھتا ہے۔ دہی اور شہد برابر مقدار میں لے کر اچھی طرح مکس کر لیں اور اس کو اپنے چہرے پر لگائیں۔ پندرہ سے بیس منٹ تک لگا رہنے دیں اور پھر ٹھنڈے پانی سے چہرہ دھو لیں۔ یہ عمل کرنے سے آپ کی جلد پر قدرتی نکھار آئے گا اور کچھ عرصہ کے استعمال سے آپ کے چہرے کے داغ دھبے دور ہو جائیں گے۔

ٹماٹر سورج کی الٹرا وائلٹ ریز سے بچاؤ کا ذریعہ

ٹماٹر میں نہ صرف رنگ کو گورا کرنے کی خاصیت موجود ہے بلکہ یہ سور کی الٹرا وائلٹ ریز سے بھی بچاتا ہے۔ سورج کی الٹرا وائلٹ ریز ہماری جلد کے رنگ کو خراب کرنے کے ساتھ ساتھ جلد کے خلیات کو مردہ کر دیتی ہیں اور یہ مردہ خلیات جلد کو بے رونق کر دیتے ہیں۔ ٹماٹر کو فریج میں رکھ لیں اور پھر اس کے سلائسز کاٹ کر اس کا رس چہرے پر لگائیں۔ اس سے چہرے کو سکون بھی ملے گا اور رنگت گوری ہونے کے ساتھ ساتھ ٹماٹر سورج کی الٹرا وائلٹ ریز سے بچاؤ بھی کرتا ہے۔

ہلدی سے رنگت نکھاریں

ہمارے ہاں یعنی کہ ایشیا میں دُلہنوں کا اپنی شادی سے پہلے اُبٹن اور ہلدی لگانے کا رواج قدیم زمانے سے چلتا آ رہا ہے۔ ہلدی کی اگر بات کی جائے تو یہ اینٹی بیکٹیریل ہوتی ہے اور اس کے ساتھ ساتھ اس میں رنگ کو گورا کرنے کے جادوئی اجزاء بھی موجود ہوتے ہیں۔جس کی وجہ سے اس کو فوری طور پر رنگ گورا کرنے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔ ہلدی چہرے پر قدرتی نکھار لاتی ہے اور دُلہن پر ڈھیروں رُوپ آ جاتا ہے۔ ہلدی کو فیس ماسک بنانے کے لیے ایک چمچ ہلدی لیں اور اس میں دو چمچ لیموں کا رس ما کر پیسٹ سا بنا لیں۔ پھر اس کو چہرے پر لگائیں۔ پندرہ منٹ لگا رہنے دیں اور پھر چہرے کو پانی سے دھو لیں۔ یہ فیس ماسک جلد کی میل کچیل دور کرتا ہے اور چہرے کو فوری طور پر گورا کرتا ہے۔ اس فیس ماسک کے مسلسل استعمال سے چہرے کے داغ دھبے بھی دور ہو جاتے ہیں۔

دودھ اور شہد کا فیس پیک

شہد کے اندر ایسے اجزاء پائے جاتے ہیں جو جلد کو نرم و ملائم رکھتے ہیں اور دودھ میں موجود اجزاء جلد کو نکھارنے میں مدد دیتے ہیں ۔ دودھ اور شہد کا فیس پیک بنانے کے لیے ایک چمچ شہد اور ایک چمچ ہی دودھ لیں۔ دونوں کو اچھی طرح مکس کر لیں کہ یہ یکجان ہو کر پیسٹ کی شکل اختیار کر لے۔ پھر اس پیسٹ کو ہلکے ہاتھوں سے گول دائرے کی شکل میں چہرے پر لگائیں۔ 10 منٹ لگا رہنے دیں اور پھر پانی سے چہرہ دھو لیں۔
اس بات کا خاص خیال رکھیں کہ اگر آپ کے چہرے پر ایکنی کا مسئلہ ہے یا آگر آپ کی جلد چکنی ہے تو پھر یہ فیس پیک نہ لگائیں۔

بیسن اور دہی کا سکرب

بیسن میں رنگ گورا کرنے کی خاصیت موجود ہے۔ بیسن نہ صرف رنگ صاف کرتا ہے بلکہ جلد کو صحت مند بھی بناتا ہے۔ بیسن اور دہی کا سکرب بنانے کے لیے دو چمچ بیسن کے لیں۔ اس میں ایک چمچ دہی ڈال کر مکس کر لیں۔ پھر اس میں آدھا چمچ ہلدی اور آدھا چمچ ہی لیموں کا رس ملا کر اچھی طرح مکس کر لیں اور اس مکسچر کو سکرب کی طرح چہرے پر لگائیں۔پانچ سے دس منٹ تک اسے سکرب کی طرح چہرے پر ملتے رہیں اور پھر چہرے پر لگا رہنے دیں اور پندرہ سے بیس منٹ تک لگا رہنے دیں اور پھر چہرہ دھو لیں۔
اس گھر کے بنے سکرب سے چہرہ ترو تازہ اور شاداب رہتا ہے اور رنگت جادوئی طور پر صاف اور جلد چمکدار ہو جاتی ہے۔

مندرجہ بالا گھریلو ٹوٹکے اپنائیے اور ہو جائیں منٹوں میں گورے گورے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *