پودینہ صحت اور خوبصورتی کا بادشاہ

پودینہ صحت اور خوبصورتی دونوں کا بادشاہ۔۔۔ جی ہاں جناب!! پودینے کو صحت اور خوبصورتی دونوں کا بادشاہ کہا جاتا ہے۔ کیونکہ پودینے سے ایسے بہت سے مسائل حل ہو جاتے ہیں جن کا شائد ہمیں علم بھی نہیں ہے۔ یہ ہرا ہرا سا پودینہ نہ صرف ہمارے کھانوں کو مزیدار بناتا ہے بلکہ بہت اچھا ماؤتھ واش بھی ہے۔ پودینہ کھانے سے سانسیں تازگی سے بھرپور رہتی ہیں اور منہ کی بدبو ختم کر کے خوشگوار مہک آنے لگتی ہے۔

پودینہ ویسے تو سستا سا آتا ہے لیکن اس کے فوائد بے شمار ہیں۔ نہ صرف ہماری صحت کے لحاظ سے اس میں جادو کا سا اثر ہے بلکہ ہماری جلد کے مسائل بھی دور کرتا ہے۔ وہ لڑکے اور لڑکیاں جو اپنا رنگ گورا کرنا چاہیتے ہیں اور چہرے پر قدرتی چمک چاہتے ہیں انہیں چاہیئے کہ مہنگی مہنگی کریموں کے بجائے کی بجائے پودینے کا پانی استعمال کریں۔ اس کے لیے پودینے کا پانی کیسے بنانا ہے اور کیسے استعمال کرنا ہے یہ بھی آج کے اس بلاگ میں ڈسکس کرنے جا رہے ہیں۔ تو اگر آپ چاہتے ہیں کہ اس سستے سے پودینے سے بے شمار فوائد حاصل کر سکیں تو آپ بالکل صحیح جگہ پر بالکل صحیح بلاگ پڑھ رہے ہیں کیونکہ آج کا یہ بلاگ آپ کے بہے سے مسائل حل کرنے والا ہے اور آپ کم پیسوں میں بہت سے فوائد حاصل کرنے والے ہیں صحت کے حوالے سے بھی اور خوبصورتی کے حوالے سے بھی اور ساتھ ہی ساتھ آپ کو پودینے کی بہت ہی مزے کی چٹنیوں کا بھی بتائیں گے۔ تو سب سے پہلے بات کرتے ہیں پودینے کی خاصیت کی، کہ آخر یہ ہمارے لیے اتنا فائدہ مند کیوں ہے؟؟

پودینے میں موجود غذائی اجزاء

پودینے میں بہت سے غذائی اجزاء پائے جاتے ہیں جو ہمارے جسم کے لیے بے حد ضروری ہیں۔جیسا کہ کیلشئیم، آئرن، وٹامن اے، وٹامن سی، میگنیشیئم، پوٹاشیم، فاسفورس، فولیٹ۔ یہ اجزاء نہ جسمانی صحت کے ساتھ ساتھ جلد کے مسائل کے لیے بھی یکساں مفید ہیں۔

صحت کے حوالے سے پودینے کے فوائد

پیٹ کے مسائل

یہ ہرا ہرا سا، ٹھنڈا ٹھنڈا پودینہ کھانے سے پیٹ کے بہت سے مسائل حل ہو جاتے ہیں۔ اس میں موجود غذائی اجزاء بد ہضمی جیسے مسائل دور کرنے میں معاون کردار ادا کرتے ہیں اور کھانا جلد ہضم کرنے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ پودینے کے سبز پتوں میں پیٹ کے کیڑے مارنے کی بھی خاصیت پائی جاتی ہے۔ اس لیے جن بچوں کے پیٹ میں کیڑوں کا مسئلہ ہو، انہیں پودینے کا استعمال ضرور کروائیں۔

سانسوں کو بنائے خوشگوار

پودینہ کھانے سے سانسیں خوشگوار رہتی ہیں اور تازگی کا احساس رہتا ہے۔ اس کے علاوہ پودینہ مُنہ کے بہت سے مسائل حل کرنے میں مدد دیتا ہے۔ یہ ہرے ہرے سے پتے کھانے میں تو خوش ذائقہ ہیں ہی، اس کے ساتھ ساتھ یہ جراثیم کُش بھی ہیں۔ مُنہ سے جراثیموں کا خاتمہ کرتے ہیں اور مُنہ کے چھالوں کے علاج کے لیے مفید ہیں۔ اس کے علاوہ مسوڑوں کی سوزش اور دانتوں کے درد میں بھی بہت مفید ہے۔

سر درد سے نجات

پودینے کے تیل کی مالش سر میں کرنے سے سر درد سے نجات ملتی ہے اور اگر سر درد ہو تو بعض اوقات پودینے کو سونگھنے سے سر درد جاتا رہتا ہے۔

معدے کے لیے بہترین

پودینے میں ایسے مرکبات شامل ہیں جو معدے کے لیے بہت اچھے ہیں۔ معدے کے بہت سے مسائل کو یہ ہرا بھرا سا پودینہ حل کر دیتا ہے۔ معدے میں گیس کا مسئلہ ہو یا قبض کا مسئلہ یا پھر بد ہضمی ہو یا متلی، قَے وغیرہ کے مسائل ہوں۔ ان تمام مسائل کا حل ان ہرے ٹھنڈے سے پتوں میں ہے۔ کوشش کریں کہ کھانے میں پودینہ ضرور شامل کریں، یہ کسی بھی صورت میں کھایا جا سکتا ہے، چاہے سلاد کے طور پر کھا لیں یا پھر چٹنی بنا لیں۔ایک یہ کھانے کا مزہ دوبالا کر دیتا ہے اور دوسرا جسمانی صحت کے لیے اس کے فائدے ہی فائدے ہیں۔

سانس کے لیے بہترین دوا

پودینہ ہمارے سانس کو بہتر بناتا ہے۔ جلدی جلدی سانس چڑھنے کے عمل کو درست کرتا ہے۔اس کے ساتھ ساتھ نظام تنفس کے بہت سے مسائل دور کرنے میں مفید ہے۔

کولیسٹرول کے مسائل

پودینے کا ایک اور بہت ہی اہم اور بڑا فائدہ یہ ہے کہ یہ ہمارے جسم سے کولیسٹرول کو کم کرنے میں مدد دیتا ہے۔ کولیسٹرول کو کم کرنے کے لیے پودینے کا جوس بہت مفید ثابت ہوتا ہے۔

بلڈ پریشر کے مسائل

پودینے میں بلڈ پریشر کو اپنی صحیح سطح پر رکھنے کی خاصیت ہے۔ ہمارے جسم میں بلڈ پریشر زیادہ ہوتا ہو یا کم، دونوں ہی صورتوں میں پودینہ اپنی مثال آپ ہے۔ پودینہ کھانے سے ہم اپنا پلڈ پریشر نارمل رکھ سکتے ہیں۔

شوگر کے مریضوں کے لیے بہترین

پودینہ جہاں بہت سی بیماریوں سے بچاتا ہے وہیں یہ شوگر کے مریضوں کے لیے بھی قدرت کا انمول تحفہ ہے۔ شوگر کے مریضوں کو چاہیئے کہ پودینے کی چٹنی کا استعمال ہر کھانے کے ساتھ کریں اور چٹنی میں صرف ان چار چیزوں کا استعمال کریں۔ پودینہ، لہسن، ادرک اور انار دانہ۔ ان سب چیزوں کی چٹنی بنا کر رکھ لیں اور ہر کھانے کے ساتھ ایک یا دو چمچ کھا لیں۔ انشاءاللہ شوگر لیول کنٹرول رہے گا۔

خوبصورتی کے لیے

رنگ گورا کرنا

پودینہ جہاں صحت کے مسائل میں بہت اہم کردار ادا کرتا ہے ، وہیں یہ صحت کے ساتھ ساتھ جلد کے مسائل بھی حل کرنے میں اپنی مثال آپ ہے۔ پودینے کا پانی پینے سے چہرے پر ایسا نکھار آتا ہے کہ دیکھنے والا دیکھتا ہی رہ جائے اور آپ سے آپ کے چہرے کی دلکشی کا راز بھی پوچھیں گے لوگ ۔ تو پدینے کا پانی پینا شروع کر دیں تا کہ آپ کے چہرے پر قدرتی نکھار آ جائے۔ اسے بنانے اور استعمال کرنے کا طریقہ درج ذیل ہے۔

اجزاء

پودینے کے پتے ———— ایک پیالی
پانی ———— ایک لیٹر

بنانے کا طریقہ

پانی میں پودینے کے پتے ڈال کر اُبالنے کے لیے رکھ رکھ دیں۔ اتنا پکائیں کہ پانی آدھا رہ جائے۔ ٹھنڈا ہونے پر چھان کر بوتل میں بھر کر رکھ لیں۔ روزانہ نہار منہ چوتھائی کپ پی لیں۔ یہ بات یاد رہے کہ پانی کو فریج میں رکھیں تا کہ خراب نہ ہو اور جب پینا ہو تو چوتھائی کپ نکال کر چولہے پر تازہ کی طرح کر کے پی لیں۔ یہ پانی آپ پینا شروع کریں گے تو یقین کریں کہ ایک ہفتے میں ہی آپ کو نتائج ملنا شروع ہو جائیں گے۔ یہ پانی کم از کم ایک مہینہ باقاعدگی سے استعمال کریں۔ یہ آزمودہ نسخہ ہے ۔اس کے استعمال سے چہرہ شاداب ہو جاتا ہے۔ رنگ گورا اور بے داغ ہو جاتا ہے اور چہرے پر ایک قدرتی چمک سی آ جاتی ہے۔

کیل مہاسوں سے چھٹکارا

پودینہ کیل مہاسوں سے بھی چھٹکارا پانے کے لیے بہت ہی اہم کردار ادا کرتا ہے۔ پودینے میں سِلسِلِک ایسڈ اور وٹامن ڈی کی موجودگی کے باعث یہ چہرے کے دانوں سے نجات دلاتا ہے۔ پودینے کا پیسٹ بنا کر چہرے پر لگائیں اور اپنے چہرے کو کیل مہاسوں سے نجات دلائیں۔

جھریوں کا خاتمہ

پودینہ نہ صرف رنگ گورا کرنے کے لیے اہم ہے بلکہ اس میں جھریاں کم کرنے کی بھی افادیت پائی جاتی ہے۔ یہی پانی جو اوپر بتایا گیا ہے اسی پانی کا کچھ حصہ سپرے والی بوتل میں بھر لیں اور دن میں 2 یا 3 مرتبہ اس پودینے والے پانی کا سپرے اپنے چہرے پر کریں۔ آہستہ آہستہ یہ پانی آپ کے چہرے سے جھریاں کم کرنے میں مددگار ثابت ہو گا۔

منہ کی صفائی

اسی پودینے والے پانی کو ماؤتھ واش کے طور پر بھی استعمال کیا جاتا ہے۔ اس سے کُلیاں کرنے سے اندر سے منہ کی صفائی ہو جاتی ہے۔ جراثیم ختم ہوتے ہیں اور منہ کی بدبو ختم ہو جاتی ہے اور سانسیں خوشگوار ہو جاتی ہیں۔

اگر پودینے سے متعلق آپ بھی کچھ جانتے ہیں تو کمنٹ سیکشن میں ہم سے شیئر ضرور کیجئے۔ شکریہ

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *